لاڈلے کیلئے قانون کا دہرا معیار عدالت کے ماتھے پر بدنما داغ ہے، حافظ حمد اللہ

کو ئٹہ  جمعیت علمائاسلام کے مرکزی رہنما سابق سینیٹر حضرت مولانا حافظ حمداللہ نے کہا ہے کہ آئین اور قانون سے کوئی قوت بالادست نہیں ملک میں آئین اور قانون کی بجائے کسی قوت کی بالادستی تسلیم کی ہے نہ کریں گے لاڈلا اب بھی کچھ قوتوں کا لاڈلا ہے قانون کا دہرا معیار عدالت کے ماتھے پر بدنما داغ ہے

ملک میں مذہبی جماعتوں کے لیے قانون کا پیمانہ ایک اور دیگر جماعتوں کے لیے الگ ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز مدرسہ عربیہ تدریس القرآن چمن کے زیر اہتمام منعقدہ عظیم الشان دستار فضیلت کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی کانفرنس سے جمعیت علمائاسلام کے دیگر رہنما ں اور مقامی علمائے کرام نے بھی خطاب کیا

انہوں نے کہا کہ دنیا علم کو انسانیت سے اشنا کرنے والی مذہب دین اسلام ہے اور دینی مدارس ہی دین اسلام کے اشاعت کے اہم ترین مراکز ہیں انہوں نے کہاکہ خود کو وسیع النظر اور مسلمانوں کو تنگ نظر کہنے والا مغرب اسلام دشمنی میں انسانیت کی ہر حد پار کرچکا ہے مغربی ممالک میں حکومتی سرپرستی میں شعائر اسلام کی توہین کے واقعات ہوئے ان کی تنگ نظری اور اسلام و مسلمان دشمنی عیاں ہے انکا مکروہ چہرہ بے نقاب کرکے رہیں گے انہوں نے کہاکہ نوجوان مغربی تہذیب سے متاثر ہونے کی بجائے اپنے اسلاف کے کردار اور تاریخ کا مطالعہ کریں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.